Posts

Urdu Designed Poetry

خاموشی رات کی دیکھتاہوں اور تجھے سوچتا ہوں

Image
http://en.gravatar.com/wazirabad7 Poet: Wasi Shah By: UrduLover خاموشی رات کی دیکھتاہوں اور تجھے سوچتا ہوں مد ہوش اکثر ہوجاتا ہوں اور تجھے سوچتا ہوں
ہوش والوں میں جاتا ہوں تو الجھتی ہے طبعیت سو با ہوش پڑا رہتا ہوں اور تجھے سوچتا ہوں
تو من میں میرے آ جا میں تجھ میں سما جاؤں ادھورے خواب سمجھتا ہوں اورتجھے سوچتا ہوں
جمانے لگتی ہیں جب لہو میرا فر خت کی ہوائیں تو شال قر بت کی اوڑھتا اور تجھے سوچتا ہوں
https://i.imgur.com/ZswmdGL.jpg https://i.imgur.com/7bzOWHc.jpg


Ajnabi sitam ghar

Image
http://en.gravatar.com/wazirabad7 https://orig00.deviantart.net/7588/f/2018/299/5/2/ajnabi_sitamghar0000_2_by_urdulover-dcqdqwj.jpg https://wazirabad7.wordpress.com/2018/10/26/%D8%A7%D8%AC%D9%86%D8%A8%DB%8C-%D8%B3%D8%AA%D9%85%DA%AF%D8%B1-2/ اجنبی ستمگر تجھ بن نہیں کٹتی مری یہ رات ستمگر بس  میں نہیں اب دل کے یہ حالات ستمگر
وہ ملتا ہے اب اجنبی بن کے کیوں مجھ سے کیوں اپنا رہا ہے وہ یہ عادات ستمگر

Majhooda Halaat

Image
http://en.gravatar.com/wazirabad7 https://orig00.deviantart.net/3090/f/2018/296/5/4/ghandham_ameer_shehir_by_urdulover-dcq55qy.jpg فونٹ ایفیکٹ کیسے دیتے ہیں ایک عدد ٹٹوریئل آئی ٹی قلم پر دیکھئے  http://www.itqalam.com/showthread.php?t=125294 Sharing @ Wordpress https://wordpress.com/post/wazirabad7.wordpress.com/2843

اردو شاعری میں پھول کا تصور

Image
http://en.gravatar.com/wazirabad7 https://orig00.deviantart.net/…/1049_by_urdulover-dcpvuy3.g… اردو شاعری میں پھول کا تصورشہنشاہ غزل میر تقی میرؔ نے اپنے معشوق کی بے اعتنائی کا گلہ کرتے ہوئے کہا تھا ۔
پتاّ پتّا بوٹا بوٹا حال ہمارا جانے ہے
جانے نہ جانے گل ہی نہ جانے باغ تو سارا جانے ہے
میرؔ نے اس ایک شعر میں اپنی ساری قلبی کیفیت کو بیان کرڈالا اور دو مصرعوں میں انہوں نے ایسا درد بیان کیا جو کئی صفحات پر بھی شاید بیاں نہ کیا جاسکے ۔ میرؔ نے دنیا کو باغ اور یہاں بسنے والوں کو پتا اور بوٹا کہا ہے جب کہ اپنے محبوب کو گل سے تعبیر کیا ہے اور شکایت کی ہے کہ سب میرے احوال سے واقف ہیں بجز میرے محبوب کے ۔ اردو کے ممتاز شاعر اسداللہ خان غالبؔ نے اپنے محبوب کے دیدار کو گلوں کی رعنائی سے تعبیر کیا ہے ۔ کہتے ہیں۔بخشے ہے جلوۂ گل ذوق تماشہ غالبؔ
چشم کو چاہئے ہر رنگ میں وا ہوجانا
غالبؔ کہتے ہیں کہ محبوب کے حسن میں وہ دلکشی ہے کہ نظر میں کچھ اور سماتا ہی نہیں دل چاہتا ہے کہ بس دیکھتے جائیں اور اپنی آنکھوں کو راحت کا سامان پہنچائیں ۔ اس شعر میں غالبؔ نے یہ بھی کہا ہے کہ آنکھیں وہی دیکھتی ہیں جو انسان اسے دکھ…

حکم تیرا ہے تو تعمیل کیے دیتے ہیں

Image
http://en.gravatar.com/wazirabad7 https://orig00.deviantart.net/6cb5/f/2018/292/7/d/153996548604274583_by_urdulover-dcptmpa.gif https://orig00.deviantart.net/6cb5/f/2018/292/7/d/153996548604274583_by_urdulover-dcptmpa.gif
حکم تیرا ہے تو تعمیل کیے دیتے ہیںزندگی ہجر میں تحلیل کیے دیتے ہیں
تو میری وصل کی خواہش پہ بگڑتا کیوں ہےراستہ ہی ہے چلو تبدیل کیے دیتے ہیں
آج سب اشکوں کو آنکھوں کے کنارے پہ بلاؤآج اس ہجر کی تکمیل کیے دیتے ہیں
ہم جو ہنستے ہوئے اچھے نہیں لگتے تم کوتو حکم کر آنکھ ابھی جھیل کیے دیتے ہیں

فاخرہ بتول یہ چاند یہ سورج یہ ستارہ تری آنکھیں

Image
http://en.gravatar.com/wazirabad7 https://orig00.deviantart.net/ac21/f/2018/291/b/4/ye_chand_ye_sooraj0000_by_urdulover-dcpqfak.jpg https://wordpress.com/post/wazirabad7.wordpress.com/2835 فاخرہ بتولیہ چاند یہ سورج یہ ستارہ تری آنکھیںساگر کی یہ موجیں یہ کنارہ تری آنکھیںپوچھا گیا خوابوں کا خلاصہ بھی کوئی ہےبے ساختہ ہر شخص پکارا تری آنکھیں

اسے کہنا بچھڑنے سے محبت تو نہیں مرتی

Image
http://en.gravatar.com/wazirabad7 https://wordpress.com/post/wazirabad7.wordpress.com/2833
https://orig00.deviantart.net/06f3/f/2018/290/0/0/merey_barey_main_1351_by_urdulover-dcpnog7.gifاسے کہنا بچھڑنے سے محبت تو نہیں مرتیاسے کہنا بچھڑنے سے محبت تو نہیں مرتی . . بچھڑ جانا محبت کی صداقت کی علامت ہے . .محبت ایک فطرت ہے ، ہاں فطرت کب بدلتی ہے . . سو ، جب ہم دور ہو جائیں ، نئے رشتوں میں کھو جائیں . .تو یہ مت سوچ لینا تم ، کہہ محبت مر گئی ہو گی . . نہیں ایسی نہیں ہوگا . .میرے بارے میں گر تمہاری آنکھیں بھر آئیں . . چھلک کر ایک بھی آنسو پلک پہ جو اُتَر آئے . .تو بس اتنا سمجھ لینا ، جو میرے نام سے اتنی تیرے دل کو عقیدت ہے . .تیرے دل میں بچھڑ کر بھی ابھی میری محبت ہے . . محبت تو بچھڑ کر بھی سدا آباد رہتی ہے . .محبت ہو کسی سے تو ہمیشہ یاد رہتی ہے . . محبت وقت کے بے رحم طوفان سے نہیں ڈرتی . .اسے کہنا بچھڑنے سے محبت تو نہیں مرتی . . . !